Six Day War

SIX DAY WAR,history, history in urdu, history in english, religion, history of world, history of islam, history of religion, zoroastrianism, sikh, jainism, confucianism, rastafari, paganism, atheism, gnosticism, polytheism, sufism, agnosticism, sikh religion, oldest religion, history of basketball, monotheistic, abrahamic religions, theosophy, religions of the world, bahai religion, history of badminton, manichaeism, world cup history, oldest religion in the world, religion of peace, pagan religion, religiosity, druze religion, types of religion, jain religion, largest religion in the world, laveyan satanism, animist, history of english language, catholic religion, monotheistic religions, fastest growing religion, history of soccer, omnism, god is not great, catholic beliefs, odinism, list of religions, mormon temple, vodou, confucianism beliefs, religio, greek religion, history of swimming, religious beliefs, all religions, non religious, mithraism, polytheistic religion, protestant religion, biggest religion in the world, egyptian religion, religious studies, philosophy of religion, deisme, zayn malik religion, orthodox religion, russian religion, islam religion history, zoroastrian religion, tengrism, viking religion, hockey history, origin of english language, kabaddi history, obama religion, donald trump religion, korean religion, indian religions, science and religion, olympic games history, largest religion in the world 2019, trump religion, olympics history, sikh empire, fastest growing religion in the world, judaism history, best religion in the world, folk religion, first religion in the world, comparative religion, turkish religion, jordan religion, sociology of religion, world cup winner 2015, urdu language history, major religions of the world, top religions in the world, catholic and protestant, atheist religion, what religion, roman catholic religion, semitic religions, indonesian religion, belief in god, boris johnson religion, illuminati religion, longest six in cricket history 173 meters, oldest sport in the world,

اس لڑائی کی ابتدا پانچ جون سنہ 1967 کو ہوئی تھی



اسرائیلی وقت کے مطابق صبح 7:10 بجے تھے۔ فرانس میں پچاس کی دہائی میں بنائے گئے راکٹوں سے لیس 16 میجسٹری فاؤگا تربیتی طیارے نے ہیٹزور ایئر بیس سے پروان بھری۔

یہ فاوگا طیارے مسٹیئر اور میراج جیٹ طیاروں کے ذریعہ استعمال کی جانے والی فریکوئنسیاں ٹرانسمٹ کر رہے تھے اور یہ تاثر دے رہے تھے کہ وہ میسٹیر اور میراج طیارے کی طرح فضائی گشت کی ڈیوٹی پر ہیں۔
اس کے چار منٹ بعد اصل حملہ آور اوریگن نے ہیٹزور ہوائی اڈے سے اڑان بھری۔
اور پھر اس کے پانچ منٹ کے بعد رماٹ ڈیوڈ ایئر بیس سے میراج جنگی طیاروں کا ایک مکمل اسکواڈرن اور ہیٹزیرم ایئر بیس سے دو انجنوں والے 15 واٹورز طیاروں نے پرواز کی۔ ساڑھے سات بجتے بجتے اسرائیلی فضائیہ کے 200 طیارے فضا میں تھے۔
اس سے قبل اسرائیلی فضائیہ کے کمانڈر موٹٹی ہاڈ کا ریڈیو پیغام تمام پائلٹوں کے ہیڈ فون پر سنا گیا تھا جس میں انھوں نے کہا تھا 'اڑیے، دشمنوں پر چھا جائیے، اسے برباد کر کے اور اس کے ٹکڑوں کو پورے صحرا میں پھیلا دیں تاکہ آنے والی کئی نسلوں تک اسرائیل اپنی سرزمین پر محفوظ رہ سکے۔'

چھ روزہ جنگ
تصویر کے کاپی رائٹBOOK - SIX DAYS OF WAR


زمین سے صرف 15 میٹر کی بلندی پر پرواز
سنہ 1967 کی جنگ کے حوالے سے مشہور کتاب 'سکس ڈیز آف وار' کے مصنف مائیکل بی اورین لکھتے ہیں: 'یہ تمام طیارے زمین سے صرف 15 میٹر کی بلندی پر اڑ رہے تھے تاکہ مصر کے 82 راڈار مراکز ان طیاروں کی راہ کا پتہ نہ لگا سکیں۔ ان میں سے زیادہ تر طیارے سب سے پہلے مغرب میں بحیرہ روم کی سمت گئے تھے۔ وہاں سے انھوں نے یو ٹرن لیا اور مصر کی جانب مڑ گئے۔ دوسرے طیاروں نے بحر احمر سے مصر کے اندر ہوائی اڈوں کا رخ کیا۔ تمام طیارے بہت سختی کے ساتھ ریڈیو 'خاموشی' پر عمل پیرا تھے۔ بیک وقت اڑنے والے پائلٹ ہاتھ کے اشاروں سے ایک دوسرے سے رابطہ کر رہے تھے۔ سارا کھیل ہی یہ تھا کہ مصر کے ساحل پر پہنچنے سے پہلے وہ اس کے بارے میں کچھ نہ جان سکیں۔
اس سے قبل اسرائیلی فضائیہ کے چیف آف آپریشن کرنل رفا ہارلیو نے تمام پائلٹوں سے کہہ رکھا تھا کہ طیارے کی تکنیکی خرابی ہونے کے بعد بھی انھیں ریڈیو پر رابطے قائم کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ ایسی صورتحال میں انھیں اپنے طیارے کو سمندر میں کریش کرنا ہوگا۔

چھ روزہ جنگتصویر کے کاپی رائٹBOOK - SIX DAYS OF WAR


وزراء کو بھی خفیہ مشق کی خبر نہیں
یہ سارے اسرائیلی پائلٹ مصری پائلٹوں کے مقابلے میں کہیں زیادہ تربیت یافتہ تھے۔ ان کے طیارے 'اڑنے کے اوقات' بھی ان سے زیادہ تھے اور سب سے بڑی بات یہ تھی کہ اس کے تقریبا تمام 250 طیارے مکمل طور پر آپریشنل تھے۔
انھوں نے مصری فضائی اڈوں کو اڑانے کی کئی بار 'فرضی' مشق کی تھی۔ اس مشق کو اس قدر خفیہ رکھا گیا کہ اسرائیل کے چند وزراء کو چھوڑ کر زیادہ تر وزراء کو بھی اس کی بھنک بھی نہیں تھی۔
جرمنی میں پیدا ہونے والے اسرائیلی جاسوس وولف گینگ لاٹز نے اپنے آپ کو سابق ایس ایس آفیسر بتا کر مصری فوج کے اعلی عہدیداروں سے دوستی کر لی تھی۔
سنہ 1964 میں اپنی گرفتاری سے قبل انھوں نے اسرائیل کو مصر کی کئی خفیہ معلومات پہنچا دی تھیں۔ اسرائیل کو اپنے دوسرے جاسوسوں سے مزید خفیہ معلومات حاصل تھیں۔
ان میں سے علی الالفی نامی ایک شخص تھا جو صدر ناصر کی مساج کیا کرتا تھا۔ مصری فضائیہ کی سب سے بڑی غلطی یہ تھی کہ انھوں نے اپنے جنگی طیاروں کو چھپانے کی کوئی کوشش نہیں کی۔
ایہود یانے اپنی کتاب 'نو مارجنز فار ایرر: میکنگ آف دی اسرائیل ایئرفورس' میں لکھتے ہیں: 'مصر نے اپنے تمام طیارے کو ان کے' میک 'کے مطابق تعینات کر رکھا تھا۔ مگ، الیوشن اور ٹوپو لیو طیاروں کے مختلف ٹھکانے تھے۔ اگرچہ ان کی فضائیہ نے ان کے لیے کنکریٹ'ہینگرز' بنانے کی تجاویز دی تھیں لیکن ایک بھی ہینگر تیار نہیں ہوا تھا۔ مصر کے سارے جہاز کھلے آسمان کے نیچے کھڑے تھے اور ان کے آس پاس کسی بھی طرح کے سینڈ بیگ کا بندوبست بھی نہیں کیا گیا تھا۔ اسرائیل کی فضائیہ کے کمانڈر موٹٹی ہاڈ کہا کرتے تھے کہ 'جنگی طیارے کے زیادہ آسمان میں کوئی بھی چیز خطرناک نہیں ہے لیکن زمین پر وہ اپنا دفاع کرنے کے بھی قابل نہیں ہوتے۔'

PAKISTAN NEWS

[Latest-Pakistani-news-in-Urdu][bleft]

Mobile Price

[Mobile-Price-in-Pakistan][bleft]

Interesting Facts

[Interesting-Facts-in-Urdu][bleft]

Interesting Information

[Interesting-Information-in-Urdu][bleft]

Interesting Stories

[Interesting-Stories-in-Urdu][bleft]

HEALTH

[Totkay-in-Urdu][bleft]

TECH

[Tech-News-in-Urdu][bleft]

WORLD

[World-News-in-Urdu][bleft]

CRICKET NEWS

[Today-Cricket-News-in-Urdu][bleft]

Pakistani Showbiz

[Latest-Showbiz-News-in-Urdu][bleft]

Bollywood News

[Bollywood-News-in-Urdu-Today][bleft]

BUSINESS

[Business-News-in-Urdu][Bleft]